Safar Meraj Ki Hikmaten : Safar k tanazur me اسریٰ اور معراج کے سفر کی منفرد حکمتیں:مختلف اسفار کے تناظرمیں - NOORI ACADEMY

Latest

Noori Academy

Search Now

Wednesday, March 10, 2021

Safar Meraj Ki Hikmaten : Safar k tanazur me اسریٰ اور معراج کے سفر کی منفرد حکمتیں:مختلف اسفار کے تناظرمیں

 اسریٰ اور معراج کے سفر کی منفرد حکمتیں:مختلف اسفار کے تناظرمیں

 

از:عطاءالرحمن نوری (ریسرچ اسکالر) مالیگاﺅں


    ابتدائے آفرینش سے لے کر آج تک انسان مصروفِ سفر ہے۔انسان کا سفر علم ِالٰہی سے شروع ہوتا ہے۔علم ِالٰہی سے عالم ِارواح کا سفر،عالم ِارواح سے باپ کی پُشت کا سفر،پُشت ِ فادر سے رحم ِ مادر کا سفر اور پھر رحم ِ مادر سے دنیاوی سفر۔ اس سفر کا اختتام خالق کائنات کی بارگاہ میں پہنچنے پر ہوگا۔انسان کے ظاہری سفر کا آغاز تمام انسانوں کے جد امجد سیدنا آدم علیہ السلام کی ذات سے ہوتا ہے۔ابوالبشر حضرت آدم علیہ السلام کی تخلیق جنت میں ہوئی اور آپ زمین پر تشریف لائے،یہ آپ کا جنت سے زمین کی جانب سفر تھا۔ حضرت ابراہیم علیہ السلام کا زوجہ محترمہ حضرت ہاجرہ اور بیٹے حضرت اسماعیل علیہ السلام کے ساتھ  شہر بابل سے حرم کی سر زمین کی طرف سفر،حضرت لوط علیہ السلام کا عذاب نازل ہونے والی پانچ بستیوں (سعدون،عمورا،اوما،زبوئیم اور سدوم) سے نکل جانے کا سفر،حضرت یوسف علیہ السلام کا بازارِ مصر تک کا سفراور پھر قیدوبند سے بادشاہت کا سفر،حضرت ایوب علیہ السلام کا تندرستی وتوانائی سے آزمائش کی طرف سفرِ صبر۔حضرت یونس علیہ السلام کا شکمِ مچھلی میں چالیس روزہ سفر،حضرت موسیٰ علیہ السلام کا مصر سے مدین کی طرف سفر ہجرت،حضرت عیسیٰ علیہ السلام کا سفر آسمانی اور پھر سیدالانبیاء مونس انس وجاں شاہکار دست قدرت مصطفی جان رحمت ﷺ کے مختلف اسفار۔ کبھی بغرض تجارت ملک شام کا سفر،کبھی شہر طائف ودیگر علاقوں کا تبلیغی سفر،مکہ سے مدینہ کی جانب سفر ہجرت اور بالخصوص سفر معراج۔ غرضیکہ جدا جدا دور میں انبیائے کرام نے مختلف اسفا ر فرمائے ہیں۔

 



    نبی آخرالزماں ﷺ کے بعد آپ ﷺ کے جاں نثاروں نے دنیا کے گوشے گوشے میں تبلیغ دین کے لیے سفر کیا۔ تقریباً ایک لاکھ چوبیس ہزارصحابہ کرام میں سے حرمین طیبین میں کم و بیش چار ہزار صحابہ کرام کی مزاریں ہیں، معلوم ہوا کہ فروغِ دین کی خاطر آسمانِ ہدایت کے ان تاروں نے اللہ کی وسیع وعریض زمین پر طویل طویل اسفار کئے اور مرضی مولیٰ کے مطابق اشاعت دین کرتے ہوئے زمین کے مختلف خطوں میں آرام فرما رہے ہیں۔ ان کے عزم واستقلال کو دیکھتے ہوئے پہاڑوں کی بلند وبالا چوٹیاں سرنگوں ہوجاتیں، صحراﺅں کی وسعتیں سمٹ جاتیں اور دریاﺅں کی روانی راستہ ہموار کردیتی۔ کربلا کی خون سے رنگین سُرخ زمین آج بھی تحفظ اسلام کی خاطر کئے گئے سفر حسینی سے اسلام کی خاطر سر کٹانے کا پیغام دے رہی ہے۔ روم وایران کے جغرافیائی نقشے دنیائے کفرسے 125 لڑائیاں لڑنے والے عظیم المرتبت مجاہد، جنگجو، بہادر اور نامورسپہ سالاراسلامی تاریخ کے اولوالعزم شمشیر آزما اور عبقری جرنیل سیدناحضرت خالد بن ولیدرضی اللہ عنہ کے مختلف اسفار گستاخان رسولﷺ کے سروں کو تن سے جداکرنے کا درس دے رہے ہیں۔ جیلان کی سرزمین سے بغداد تک کا سیدنا شیخ عبدالقادر جیلانی رحمة اللہ علیہ کا علمی و روحانی سفر حصول ِعلم کے لیے جدوجہد وسعی پیہم کا نمونہ فراہم کررہاہے۔ نائب النبی فی الہند سیدنا خواجہ غریب نواز علیہ الرحمہ کا سنجر سے اجمیر مقدس کا سفر راہِ تبلیغ دین میں کلفتوں، صعوبتوں، مصیبتوں اورپریشانیوں کو اٹھانے کی تعلیم دے رہاہے۔ جذبہ سفر کی بدولت ہی محمد بن قاسم ایک مسلم خاتون کی صدا پر لبیک کہتے ہوئے سندھ کی سرزمین پر تشریف لائے اور اپنی سگی بہن سے شادی کرنے والے ظالم وجابر راجہ داہر کو شکست فاش دیتے ہوئے اسلامی پرچم کو بلند کیا۔ جبل ِطارق کی چوٹیاں قومِ بربر کے بہادر سپوت طارق بن زیاد اور شریک ِ سفر نوجوانوں کے شوقِ جنوں کی داستان سنا تے ہوئے ہر مُلک مِلکِ مااست کہ مُلکِ خداے مااست کا نعرہ مستانہ یاد دلارہی ہیں، قبلہ اول کی درودیوار عزم وہمت کے جبل شامخ سلطان صلاح الدین ایوبی کے کربناک سفر کا تذکرہ کررہی ہے۔ قسطنطنیہ کا ناقابل تسخیر قلعہ سلطان محمد فاتح کے سفرِ جرات وبہادری کے ترانے گنگنارہا ہے۔ اگر سفر کا مادہ نہ ہوتا تو واسکوڈی گاما ہندوستان دریافت نہ کر پاتا۔

 

 
     آج بھی انسانی سفر کا یہ سلسلہ دراز ہے۔لوگ اپنے سفر نامے بھی تحریر کرتے ہے۔ان سفر ناموں میں سفیر اپنے مشاہدات،تحقیقات اور موجودہ حقائق کو تحریر کرتا ہے ، ساتھ ہی قدرت کے سربستہ رازوں کو عیاں کرنے کی ہر ممکن کوشش کرتاہے۔ ہر سفیر اپنے تجربات ومشاہدات ،نتائج وحقائق اور اپنی آرا ونظریات کی روشنی میں اپنے سفرناموں کو سپر دقلم کرتا ہے۔اس ضمن میں ابن بطوطہ کے سفر نا مے قابل ذکر ہیں۔دنیا میں متعدد سفرنامے لکھے گئے اور لکھے جا رہے ہیں۔مثلاً:تاریخی سفر نامے،تہذیبی وثقافتی سفر نامے ،تجارتی سفر نامے،ادبی سفرنامے،عالمی سفر نامے، تبلیغی سفر نامے اور تفریحی سفر نامے وغیرہ وغیرہ۔ ہر سفر نامے کی قدر وقیمت اپنی جگہ مسلم ہے۔مگر سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ مذکورہ سفرناموں کی حیثیت کب تک قائم رہے گی؟ دنیا اس سے کب تک استفادہ کرسکے گی؟اکناف عالم میں یہ سفرنامے کب تک اپنی موجودگی کا احساس دلاتے رہیں گے؟جواب بالکل سیدھا اور صاف ہے کہ جن مقامات کا سفر کیاگیا ہے جب تک ان مقامات کا وجود قائم رہے گا تب تک ان سفر ناموں کی حیثیت باقی رہے گی۔جیسے کسی نے تاج محل،دیوارِ چین ، کلاسیو، پیسا کا مینار، اہرام مصر،ایفل ٹاور یا دوسری کسی اورجگہ کا سفر کیااور سفر کے بعد سفر نامہ تحریر کیاتوان سفر ناموں کی حیثیت اس وقت تک قائم رہے گی جب تک دنیا میں یہ عجائبات موجود رہےںگے۔ جس دن دنیاکے نقشے سے ان کا وجود ختم ہو گیا اس دن ان سفر ناموں کی حیثیت زبردست متاثر ہوگی۔ان سفرناموں کی حیثیت کتابوں میں محفوظ تاریخ کی سی تو ہوگی مگر اب ان سے کوئی استفادہ نہیں کر سکتا اور نہ ہی ان میں بتائے گئے خطوط پر چل کر کوئی ان کے نظارے سے اپنی آنکھیں ٹھنڈی کرسکتا۔ غرضیکہ سفرناموں کی اصل حیثیت مقامات ِ سفر کے وجود تک باقی ہوتی ہے،بعد میں وہ صرف علمی وتاریخی ورثہ بن جاتے ہے۔
 


    سفر کی دو قسمیں ہوتی ہیں۔ایک سفر وہ ہوتا ہے جو انسان خود کرتا ہے اور دوسرے وہ سفر جو کسی کی دعوت یابُلانے پر ہوتاہے۔ تمہیدی کلمات میں ہم نے عرض کیاکہ رسول اکرم ﷺنے اپنی حیات مبارکہ میں متعدد اسفار فرمائے۔ان اسفار میں مرکزی حیثیت ”سفر معراج “کو حاصل ہے۔یہ سفر سیاح لامکاں ﷺنے خود نہیں کیابلکہ خالق ارض وسما نے اپنے محبوب مکرم کو لامکاں کا سفر خود کروایا۔خالق کائنات نے اس ایک سفر میں وجہِ تخلیق کائنات کو دوسفر کرائے۔ ایک وہ سفر جب نبی مکرم، فخر مجسم، شافع امم صلی اللہ علیہ وسلم مکہ سے مسجد اقصیٰ تک تشریف لے گئے جو ”سفر اسرائ“ ہے اور دوسرا سفر وہ ہے جب آپ صلی اللہ علیہ وسلم زمان و مکان کی حدوں سے بلند ہو کر سدرة المنتہیٰ اور عرشِ معلّٰی سے بلند ہوکر لامکاں تشریف لے گئے یہ ”سفر معراج“ ہے۔


    ایک سوال یہ پیدا ہوتا ہے کہ جب رب تعالیٰ اپنے حبیب کو لامکاں بلانا چاہتا تھا تو پھر مکہ سے بیت المقدس تک کا سفر کیوں کرایا گیا؟ براہِ راست اُم ہانی کے مکان سے سواری سدرة المنتہیٰ کیوں نہیں پہنچ گئی؟ اگر اس سوال پرغور وخوض کیا جائے تو اسلامی تاریخ میں ہمیں ایسے دو واقعات اور نظر آےئنگے جن میں آسمان سے زمین پر آنا اور زمین سے آسمان کی طرف جانا ثابت ہے۔ ابوالبشر سیدنا آدم علیہ السلام جنت سے زمین پر تشریف لائے اور روح اللہ سیدنا عیسیٰ علیہ السلام زمین سے آسمان کی طرف اُٹھائے گئے۔ 

 

 یہ بھی پڑھیں : واقعہ معراج سے ستم رسیدہ اہل اسلام کے لئے خصوصی پیغام

 

تاریخ اسلام میں آنا تو ایک واقعے سے ثابت ہے مگر جانا دو واقعے سے۔ان دونوں واقعات میں جانے کی جگہ مشترک ہے۔حضرت عیسیٰ علیہ السلام بھی آسمان کی طرف اٹھائے گئے تو بیت المقدس کی سرزمین سے اور معراج کے دولہا ،سیاح لامکاںا ﷺ بھی آسمان پر بُلائے گئے تو بیت المقدس کی دھرتی سے۔ 

 

ان واقعات کو پڑھنے کے بعد گزشتہ کئی سالوں سے ایک سوچ میں ڈوبا ہوا تھا کہ آخر ایسا کیوں ہوا؟وہ رب جو ”کُن “فرماکر ساری دنیا کی تخلیق فرمانے کی قدرت رکھتا ہے کیاوہ اس بات پر قادر نہیں کہ مکہ مکرمہ کی سرزمین سے ہی اس رسول کو قرب خاص میں بُلایا جاتا جو وجہِ تخلیق کائنات ہیں؟ یقینا رب قادر ِمطلق ہے، وہ ہر چاہے پر قادر ہے مگر اس کے کاموں میں صدہا حکمتیں ہیں، حساس روحیں ان حکمتوں کا ادراک کرلیتی ہیں اور قدرت کی طرف سے عطا کردہ اشاروں کنایوں میں غوروخوض کے ذریعے قدرت کے رازِ سربستہ کو جاننے کی کوشش کرتے ہیں اور جو کوشش کرتا ہے وہ گوہر مراد کو پا لیتا ہے۔ اسی لیے اللہ پاک نے قرآن کریم میں دو سو پچاس مقامات پر تحقیق وتفتیش اور فکروعمل کی طرف رغبت دلائی ہے۔ ذہن میں پیدا اس خلجان کا جواب مجھے ماہ رمضان 2014ء میں روزنامہ انقلاب ممبئی میں شائع ہونے والے قسط واری مضمون ”انبیاء سیریز“ میں ملا۔ اس میں یہ جملہ لکھا تھا جس کا مفہوم ہے

 

 ”خلا میں جانے کے لیے راستہ بیت المقدس سے ہوکرگزرتا ہے اور تمام خلائی سیارے اسی راستے سے ہوکر گزرتے ہیں۔“ 

 

اس سائنسی تحقیق کو پڑھنے کے بعد معلوم ہوا کہ جنت سے دنیا میں آنے اور جانے کا راستہ ہے۔ (واللہ ا علم باالصواب) مگر افسوس اس بات کا ہے کہ غیروں نے راستہ دریافت کیا اس لیے وہ محض ایک خلائی راستہ ہے اور اگر مسلمان قرآن کریم کی روشنی میں اس راستے کی تلاش کرتے تو ہم دنیا کوخلائی راستہ بھی بتاتے اور قرآن و احادیث کی تعلیمات بھی۔ اس قسم کی اسلامی دعوت کے یقینا مثبت اور امید افزا نتائج برآمد ہوتے ۔ شاید یہی حکمت رہی ہو خدائے تعالیٰ کی کہ دونوں انبیائے کرام کوایک جگہ سے آسمان پر بلایا گیا ۔

 

یہ بھی پڑھیں : سیدنا امام جعفر صادق : خانوادہ نبوت کے عظیم چشم وچراغ


    اس سفر کا دوسرا حصہ سفرِ معراج ہے۔ جیسا کہ ہم نے کہا کہ سفر نامے کی حیثیت اس وقت تک قائم رہتی ہے جب تک جس چیز کا مشاہدہ کیا ہو وہ باقی رہے۔اب دیکھنا یہ ہے کہ اللہ تعالیٰ نے اپنے محبوب کو کن کن چیزوں کا مشاہدہ کروایا۔ اس ضمن میں احادیث مبارکہ ہماری رہ نمائی کررہی ہے کہ سفر معراج میں رسول گرامی وقار ﷺ نے جنت کی سیر کی اور جہنم کا مشاہدہ کیا۔ یعنی ایسی نادر ونایاب چیزوں کی سیر اور مشاہدہ کیا جنہیں نہ کسی آنکھ نے دیکھا ہے اور نہ ہی کسی کے وہم وگمان میں ان کا تصور آیا ہے۔ اور سب سے بڑی بات مصطفی کریم ﷺ نے اپنے ماتھے کی آنکھوں سے اپنے رب کا دیدار کیا۔ جنت وجہنم رب کی پیدا کردہ ہے اور رب جب تک چاہے گا ان کا وجود باقی رہے گا اور رب کی ذات ہمیشہ سے ہے اور ہمیشہ رہے گی۔ معلوم ہوا مصطفی کریم ﷺ کے سفر نامے کی حیثیت زمانی یا لمحاتی نہیں ہے بلکہ اس سفر نامے کی حیثیت ہمیشہ کے لیے مسلم ہے بلکہ یہ کہوں تو بے جا نہ ہوگا کہ جب تک رب کی ذات موجود ہے تب تک اس سفر نامے کی حیثیت باقی رہے گی اور رب کی ذات ہمیشہ باقی رہنے والی ہے۔


    ایک اور نکتہ قابل غور ہے کہ سفیر خود سفر کرتے ہےں اور اپنا سفر نامہ خود لکھتے ہےں۔ یہاں سفر کرایا بھی خدا نے ہے اور سفر نامہ بیان بھی خدا نے کیا ۔اور ایسی کتاب میں بیان کیا جو اس کا کلام ہے اور ہمیشہ باقی رہنے والی ہے۔ اب ہمیں چاہئے کہ اس سفر سے متعلق قرآن کریم واحادیث رسولﷺمیں جو خطوط بتائے گئے ہیں ،ان ہی پر اپنی زندگی گزاریں اور آخرت میں جنت کی سیر اور دیدارِ الٰہی سے اپنی آنکھوں کو ٹھنڈی کریں۔ اللہ پاک علم وعمل کی توفیق عطا فرمائے۔

 


 ٹی آر پی اور افواہوں سے دور،سچائی ، دیانت اور انصاف سے قریب ، مبنی بر حقیقت مضامین ،مقالات ، تعلیمی ، انقلابی ، معیاری اور تحقیقی و تفتیشی ویڈیوز کے لیے غیر جانبدار ادارے نوری اکیڈمی کے یوٹیوب چینل ، ویب سائٹس اور سماجی رابطے کی تمام سوشل سائٹس پر اپڈیٹ پانے کے لیے نوری اکیڈمی کو سبسکرائب ، فالو اور لائک کریں۔

 
 

..:: FOLLOW US ON ::..

https://www.youtube.com/channel/UCXS2Y522_NEEkTJ1cebzKYw
Noori Academy YouTube Channel

Noori Academy Website Urdu Version
Noori Academy Website Hindi Version

*2️⃣ Special Website for NTA NET Exam Subject Urdu By Noori Academy*


https://www.facebook.com/ataurrahman.noori/

https://www.facebook.com/Noori-Academy-731256287072325
http://www.jamiaturraza.com/images/Twitter.jpg
https://www.instagram.com/atanoori92/
 





No comments:

Post a Comment

Popular

Categories

” نیکی کر سوشل میڈیا پر ڈال “:پُرانی کہاوت کا نیا وَرژن (1) 31 December (2) 8 Interesting Facts About Saturn (1) A One-Day National e-Workshop on AN APPROACH FOR BONSAI CULTIVATION (1) A One-Day National Webinar on "Balanced Diet and Health Issues During Covid-19" (1) Aala Hazrat (1) Aazadi (10) Advocate Momin Musaddique Ahmed (2) Air Pollution (1) Al Mukhtar Magazine (1) Allama Qamruzzama Aazmi (1) Announcement (70) ANSAR SHAIKH IAS BIOGRAPHY (1) Arfa Khanum Sherwani Artcile (2) Article (137) Asthma Day (1) ATAURRAHMAN NOORI (51) Azmate Mustafa (1) Bachcho ko Sudhara kaise Jaye ? (1) Bahar-E-Sunnat 2012 (6) Bahar-E-Sunnat 2013 (26) Bahar-E-Sunnat 2014 (6) Baqra-Eid Article (2) Biography of Maulana Shakir Ali Noori (1) Book (40) Book Ijra News (35) Book on Ertugrul Ghazi (2) Book on Sultanat-E-Usmania (2) Books (28) BOOKS OF AMEER SUNNI DAWAT-E-ISLAMI (23) BOOKS OF ATAURRAHMAN NOORI (17) BOOKS OF OTHER ULMA (4) Books of Sayyed Ameenul Qadri (8) Breaking News (71) CAA (6) CAB (6) Competitive Exams (5) Competitive Exmas (9) Condolence Letter from Allama Qamr-Uz-Zama Khan Aazmi (1) Corona Malegaon Pattern (4) Corona Virus (1) Corona Virus ki Waba Aur Qaum-E-Muslm By Allama Qamruzzama Aazmi (2) Corona Warrior Certificate (1) Cricket (4) Cronan Virus (16) CSE (9) CTET (1) Current Affairs (17) Darul Uloom Sultaniya (1) Democracy (1) Dr Aamir ENT (1) Dr Hamid Iqbal DCH. ڈاکٹر حامد اقبال (1) Editorial Articles (38) Editorial Articles of Bahar-E-Sunnat (4) Education (79) Election and Governance (1) Electronic Media Association of Maharashtra (1) EMAM (3) Ertugrul Ghazi (1) Exam (24) Fatma Ka Laal Maidan E Karbala Mein (1) Feature (104) Features (37) Ghazal (4) Ghazala Fatma Research Scholar (1) Government and Administration Failure (1) Gulam Mustafa Naeemi (1) Gulam Mustafa Razvi (5) Hafiz Gufran Ashrafi (6) Hafiz Hashim Qadri (15) Haj Ki Fazilat (1) Harappa And Mohenjo-daro (1) Hayatul-Mawat Book (1) Hazrat Abu Huraira (1) Hazrat Ibraheem (1) Hazrat Khalid Bin Waleed (1) Health (4) Hindustan Ki Fazeelat (1) HISTORY (5) Ideal Teacher by Google (1) Image (3) Imam Ahmad Raza (1) Imam Husain Karbala Me (1) Imran Jameel (1) Indian History in Urdu (2) ISLAMIC HISTORY (6) Islamic Scholar aur TV Debates (2) J.A.T. Arts (1) Jang-E-Aazadi 1857 me Ulma ka Kirdar (1) JAT Campus News (1) JAT Campus News. (1) Kanzul Iman Monthly Magazine May June 2020 (1) KANZULIMAN 2016 (8) Kanzuliman Delhi Monthly Magazine February 2021 (1) Kanzuliman Delhi Monthly Magazine March 2021 (1) Kanzuliman Delhi Monthly Magazine May 2021 (1) KANZULIMAN MAGAZINE 2017 (11) KANZULIMAN MONTHLY MAGAZINE 2018 (8) Kanzuliman Monthly Magazine April 2021 (1) KanzulIman Monthly Magazine January 2021 (1) Khalid Ayyub Misbahi (7) Khandesh (1) Khanqah-E-Ashrafiya (1) Khanqah-E-Barkatiya (3) Khawaja Gareeb Nawaz (2) Khudkushi (2) Latest Corona News of Maharashtra (5) Lock Down aur Madarsa (1) Love Jihad (1) Magazine (3) Malegaon Corona (6) Malegaon District Nashik (5) Malegaon Freedom Fighters (1) Malegaon Municipal Corporation Recruitment 1006 Posts (1) Malegaon Suicide Case (2) Masjid News (2) Maualana Mohsin Raza Ziyai (5) Maula (1) Maulan Md Shakir Ali Noori (2) Maulana Sadique Raza Misbahi (1) Maulana Sayyed Ameen-Ul-Qadri (1) Maulana Shakir Ali Noori (1) Meelade Mustafa (1) Meere Arab ko aayi Thandi hawa jaha se (1) Meraj (3) MH-SET EXAM (12) MHRD (2) Mid-Day Meal (1) Moharram (1) Momin Faiyyaz Ah (1) Monthly Sunni Dawat-E-Islami Magazine (11) Monthly Sunni Dawat-E-Islami Magazine 2013 (10) Monthly Sunni Dawat-E-Islami Magazine 2014 (6) MONTHLY SUNNI DAWATEISLAMI MAGAZINE 2017 (12) Mubarak Kapdi (1) Mufti Nizamuddin Razvi (2) Mukhtar Adeel Article (2) Neki kar Social Media par Daal (1) News (102) News18 Anchor Amish Devgan (2) Nooh Siddiqui IRS (1) Noori Academy (100) Noori Mission (4) NPR (1) NRC (26) NTA NET (11) NTA NET SUBJECT URDU (5) NTA NET URDU (7) One Day National Webinar on Urdu Ghazal Samt-O- Raftar (1) Online Education (3) Ottoman Empire (2) Paighamat-E-Noori (1) Payame Barkaat (1) Ph.D. (1) Prime Time (3) Program Reports (29) PROTEST (10) Rajab (6) Rajab Ke Fazayel (1) Ram Janam Bhumi Babri Masjid ka Sach By Shitla Singh (1) Ramzan Article (4) Ramzan ki Aamad par Huzur Alahissalam ka Isteqbaliya Khutba (1) Ramzan Ul Mubarak Kaise Guzare (1) Raza Academy (4) Research Article (1) Ruhani taur par Mazboot bane (1) Saday-E-Qalam (63) Safar Nama (4) Science (1) Science and Commerce College (1) Seerat (1) SET (3) Shagufta Subhani (2) SHAIKH SALMAN PATEL (2) Shakeel Subhani (2) Sheikh Abubakr Ahmad Biography (1) Special Interview (1) SPEECH OF AMEER SUNNI DAWATE ISLAMI (1) SPEECH OP AMEER SUNNI DAWATE ISLAMI (1) Sports (4) Suicide aur Islam (2) Suicide Cases (1) Sunni Dawat-E-Islami (3) Sunni Dawateislami 2016 (12) SUNNI DAWATEISLAMI MONTHLY MAGAZINE 2018 (5) Supreme Court (2) Syed Faooq Miya Chishti (1) Tafseer-O-Hadees me Hindustan ka Tazkira (1) Tajalliyat-E-Noori (1) Tajush Sharia Number (2) Teacher's Day (1) TET (1) The Wire (2) The World's 500 Influential Muslims (2) Top Story (19) TV Debate (2) UGC NET (10) UGC NET URDU (7) UGC NET URDU SYLLABUS (6) Ummeed Team By SDI (1) UPSC (14) UPSC URDU. (6) Urdu_Adab (1) Vacancies (4) Wadaye Tajush Sharia Book (1) Wali Aurangabadi (1) Wali Deccani (1) Webinar (4) www.markazlawcollege.com (1) Zarb-E-Qalam (13) آئی اے ایس افسر شاہ فیصل (1) آمد ماہِ رمضان پر حضور اکرم کا استقبالیہ خطبہ (1) اسریٰ اور معراج کا سفر :سائنسی تحقیقات کی روشنی میں (1) اسریٰ اور معراج کے سفر کی منفرد حکمتیں:مختلف اسفار کے تناظرمیں (1) اسلام اور ہندوستان کا تعلق (1) اشرف الفقہامفتی مجیب اشر ف صاحب علیہ الرحمہ (1) اعلیٰ حضرت اور مشائخ چشتیہ (1) امیر سنی دعوت اسلامی کی خدمت میں درگاہ انتظامیہ نے ایوارڈ پیش کیا (1) انڈیا بمقابلہ انگلینڈ: اکشر پٹیل نے گلابی گیند سے تاریخ رقم کی (1) اَنوارِ تاج الشریعہ نمبر (1) بچوں کو سدھارا کیسے جائے ؟ (1) بعد از خدا بزرگ توئی قصہ مختصر (1) پانچ چیزوں کوغنیمت جانیں! . مولانا محمّد شاکرعلی نوری صاحب (1) پروفیسر شرف النہار صاحبہ کی حیات و خدمات پر مبنی کتاب کی ترتیب (1) پروگریسیو اسکول (1) پری پی ایچ ڈی کورس میں عطاءالرحمن نوری کی ممتاز کامیابی (1) پہلی سے بارہویں جماعت تک ٹیچر بننے کے لیے اب ٹی ای ٹی امتحان پاس کرنا لازمی (1) تجلیات نوری (1) تفسیر و حدیث میں ہندُستان کا تذکرہ (1) تھرٹی فرسٹ :احتساب کادن (1) تھرٹی فرسٹ منانا اتنا ہی ضروری ہے تو اس طرح منائیں (1) ٹیم انڈیا نے انگلینڈ کے خلاف ٹی 20 سیریز کے لیے اعلان کردیا (1) جمہوریت ، الیکشن اور حکومت پر نیشنل ویبینار (1) جے اے ٹی کیمپس کی ایم ایچ سیٹ امتحان میں منفرد کامیابی (1) جے جوان ،جے کسان (1) حافظ محمد قمرالدین رضوی صاحب پر کنزالایمان کا خصوصی شمارہ (1) حافظ محمد ہاشم قادری صدیقی مصباحی (1) حضرت ابراہیم علیہ السلام کی قربانیاں (1) حضرت علی المرتضیٰ کر م اللہ وجہہ کی خلافت اور اہم کارنامے (1) خدارامسلمان ہوش کے ناخن لیں! (1) خواجہ غریب نواز کے فیض کی جلوہ باریاں (1) خود کشی ایک سماجی مسئلہ ہے (1) دارالعلوم سلطانیہ چشتیہ اہل سنت دھولیہ میں عظیم الشان علی لائبریری کا افتتاح (1) دردانہ انجم مس (1) دعوت توحید (1) دنیا کی 500 با اثر شخصیات (2) دینی کتابوں کے قدیم ناشر حافظ محمد قمرالدین رضوی سپرد خاک (1) ڈاکٹرس کے ساتھ غیر اخلاقی حرکت (1) ڈپریشن اور مایوسی کی سب بڑی وجہ مادی نظریات کا فروغ (1) رام جنم بھومی بابری مسجد کا سچ (1) رب تعالیٰ کی رحمت (1) رشبھ پنت میچ میں اکشر پٹیل کو وسیم کے نام سے کیوں بلارہے تھے ؟ (1) روحانی طورپرمضبوط بن جائیے (1) زحل کے بارے میں 8 دلچسپ حقائق (1) زنا کاری بدفعلی،بے حیا انسان ،اندھا قانون یہ کیسا زمانہ آیا؟ (1) سدرشن ٹی وی کے پروگرام ” یو پی ایس سی جہاد“ پر سپریم کورٹ کی پابندی (1) سہ ماہی پیام برکات میگزین شمارہ جولائی تا ستمبر2020ء (1) سید فاروق میاں چشتی کے تاثرات (1) سیدناابراہیم خلیل اللہ علیہ السلام (1) سیدناامام جعفر صادق: خانوادہ نبوت کے عظیم چشم وچراغ (1) شعیرہ غزل کو کامیابی مبارک (1) شہزادۂ حضور احسن العلماء حضرت سید محمد افضل میاں قادری علیہ الرحمہ کی رحلت (2) طلبا کی کامیابی و ترقی میں اُستاذ کا کردار (1) عاشقان اہل بیت۲۲رجب المرجب کوقرآن خوانی ونیاز کا اہتمام کریں (1) عامری عظمت اقبال گوگل کی جانب سے مثالی استاد منتخب (1) عزیمت حج (1) علامہ قمرالزماں خان اعظمی کی جانب سے تعزیت نامہ (1) غم خوارِ اُمت مصطفی جانِ رحمت صلی اللہ علیہ وسلم ماہ ِرمضان کیسے گزاراکرتے تھے؟ (1) فاتح خیبر حضرت علی رضی اللہ عنہ کی سیرت و کردار پر ایک نظر (1) فاطمہ کا لال میدان کربلا میں (1) فتوی نویسی سے متعلق قانونی رہنمائی (1) فضائل رجب المرجب (1) فضائل ہند کی روایتیں (1) فضل ملت کا وصال ملک وملت کے لیے عظیم خسارہ : مولانا محمد شاکر علی نوری (1) فضیلة الشیخ حضرت ابوبکر احمد (1) کتاب ”این آر سی: اندیشے ،مسائل اور حل“ (1) کرونا کال میں اندیشہ وخوف سے بھرا سفر (1) کرونا وائرس کی وَبا اور قومِ مسلم (1) گلہائے اُردو (2) گیسوئے اُردو (2) لبیک اللَّھم لبیک (1) لمبے عرصے تک تعلیمی اداروں کا بند رہنا تباہ کن (1) لَوجہاد: سیاسی کرسی کی بحالی اور اسلام کو بدنام کرنے والا ہتھکنڈہ (1) ماہِ محرم میں کھلونوں کی دکانوں پر ” گن کلچر “ (1) ماہنامہ کنزالایمان دہلی ، شمارہ اپریل 2021ء (1) ماہنامہ کنزالایمان دہلی ، شمارہ فروری 2021 (1) ماہنامہ کنزالایمان دہلی ، شمارہ مئی 2021ء (1) ماہنامہ کنزالایمان دہلی ، شمارہ مارچ 2021ء (1) مظلوم اِمام!!! (1) مظلوم! کی حمایت کرنا، ظالم کے آگے کھڑے ہونا، اسلامی تعلیم کا حصہ!!! (1) مولانامحمد شاکر نوری کا عورتوں کے آن لائن سالانہ سنی اجتماع سے خطاب (1) نیشنل ٹیلنٹ سرچ اسکالر شپ امتحان (1) نیشنل ویبینار بعنوان : اُردو غزل : سمت و رفتار (1) ہڑپہ ، موہن جودڑو اور مالیگاﺅں (1) ہم ماہ رمضان المبارک کیسے گزاریں ؟ (1) ہندوستان میں شرحِ خواندگی : چند حقائق (1) ہندوستانی جیلوں میں مسلمانوں کا بڑھتا تناسب (1) واقعہ معراج سے ستم رسیدہ اہل اسلام کے لئے خصوصی پیغام (1) وَداعِ تاجُ الشریعہ (1) وقفی اور غصبی زمین کا شرعی حکم (1) ووٹ ڈالنا ایک اہم فریضہ (1) یو پی ایس سی امتحان، نصاب اور اختیاری مضمون اُردو کی انفرادیت اور نصاب (1) یو پی ایس سی سول سروسز مینس امتحان 2020ء کے نتائج کا اعلان (1) یو جی سی نیٹ امتحان کی تیاری کیسے کریں؟ (1) یوسف پٹھان نے کرکٹ کے تمام فارمیٹس سے سبکدوشی کا اعلان کیا (1) खानकाहे बरकातिया मारहरा (1) ख़ुदकुशी के पांच मुख्य कारण (1) न्यूज़ 18 टीवी चैनल (1) मालेगाव महानगरपालिकेत 1006 पदांची भर्ती (1)